Back

ⓘ اداکاری فنون ..




                                               

اداکاروں کا انتخاب

اداکاروں کا انتخاب قبل از پروڈکشن انجام دیا جانے والا عمل ہے جس میں فن کے براہِ راست یا ریکارڈ شدہ مظاہرے کے لیے اداکاروں، رقاصوں، گلوکاروں، ماڈلوں اور دیگر افراد کا انتخاب کیا جاتا ہے۔

                                               

اسٹینڈ اپ کامیڈی

اسٹینڈ اپ کامیڈی مزاح کی ایک قسم ہے جو اسٹیج پر حاضرین کے سامنے بغیر کسی واسطے اور درمیانی ذرائع کے پیش کی جاتی ہے۔ یہ مظاہرہ چوں کہ براہ راست اور بر سر موقع موجود حاضرین کے رو بہ رو کیا جاتا ہے، جس میں راست مخاطبت اور فوری رد عمل کے پہلو شامل ہوتے ہیں۔ حاضرین کی سیٹیاں، تالیاں، ہم دردانہ آواز کی چیخیں، واہ واہی، شاباشی، وغیرہ اس مزاح کا حصہ ہے۔ فن کار کبھی رضا کارانہ طور پر حاضریں کو اسٹیج پر بلاتا بھی اور ان کے ساتھ ہنسی مذاق کا مظاہرہ کرتا ہے۔ اسٹینڈ اپ کامیڈی کے بر سر عام مظاہرے کے لیے ایک فن کار کے با کمال ہنر کا ہونا ضروری ہے۔ اس کے گروں میں حاضر دماغی، خوش لب و لہجہ، مزاحیہ اور خوش ...

                                               

تھیٹر

جلوہ گاہ ، ایسی عمارت جو بالخصوص اس لیے بنائی جاتی ہے کہ اس میں تماشائی جمع ہو کر ڈراما، ناٹک دیکھیں۔ ہندوستان میں زمانہ قدیم سے ناٹک اور توٹنکیاں وغیرہ رائج تھیں۔ کالی داس ہندوستان کا مشہور ڈراما نویس گزرا ہے۔ انگلستان میں ملکہ الزبتھ کے زمانے میں تھیٹر کی بنا پڑی اور سب سے پہلا مستقل تھیٹر لندن میں بنایا گیا۔ یونان میں اس سے بہت پہلے تھیڑ کی عمارات بنائی جا چکی تھیں۔ ان کے کھنڈر اب بھی اپپی ڈور میں محفوط ہیں۔ یہ تھیٹر حضرت عیسی کے زمانے سے بہت پہلے بنائے گئے تھے۔ انگلستان میں تھیٹر کے قیام سے پہلے کلیساؤں میں ناٹک کھیلے جاتے تھے۔ یہ اور ان کے ذریعے انجیل مقدس کی کہانیاں ڈراموں کی صورت می ...

                                               

رقص

جو حرکات بے ساختہ فرطِ جذبات کے تحت ہم آہنگی کے ساتھ جسم کے مختلف اعضاء سے سرزد ہوتی ہیں انھیں رقص یا ڈانس کا نام دیا گیا ہے۔ اس لحاظ سے بعض اساتذہ فن رقص کو مصوری سے زیادہ قدیم سمجھتے ہیں۔ بلکہ سچ تو یہ ہے کہ رقص کو ڈراما، فن آرائش اور موسیقی جیسے فنون لطیفہ کی بنیاد تصور کیا جاتا ہے۔ رقص صرف انسانوں تک ہی محدود نہیں ہے۔ کہا جاتا ہے کہ پرند چرند اور کیڑے مکوڑے بھی اپنے جذباتِ عشق کا اظہار رقص ہی کے ذریعے کرتے ہیں۔ ہندوستانی مور برسات میں ناچتا ہے اور کئی اور جانور موسم بہار میں کلیلیں بھرنے لگتے ہیں۔ رقص کا لفظ استعاراً بعض بے ساختہ حرکات کو ظاہر کرنے کے لیے بھی استعمال ہوتا ہے۔ جیسے رقصا ...

                                               

عوامی تقریر

عوامی تقریر ایک ایسا طریقہ یا عمل ہے جس کے ذریعے تقریر برسرموقع حاضرین کے روبرو پیش کی جاتی ہے۔ اس طرح کی تقریر دانستہ طور تین مقاصد کی تکمیل کرتی ہے: تفریح فراہم کرنا۔ معلومات فراہم کرنا۔ کسی عمل کے کرنا یا اس سے رکنے کی ترغیب عوامی تقریر کو عمومًا رسمی، بالمُشافہ کسی ایک شخص کی گویائی تصور کی جاتی ہے۔ مقرر کے رو بہ رو سامعین کا مجمع ہوتا ہے۔ یہ پیشکش کے نزدیک ہے مگر پیش کش تجارتی سرگرمیوں میں زیادہ مستعمل ہے۔

                                               

کٹھ پتلیاں

کٹھ پتلیاں ایک طرح سے انسانوں، جانوروں، غیر جانب چیزوں، دیو مالائی یا مفروضی شخصیات کی سسلسلہ وار تفریحی نمائش ہے۔ ان کٹھ پتلیوں کو کوئی ایک شخص یا چند اشخاص چلاتے ہیں۔ ہر حرکت کے ساتھ عمومًا کچھ مکالمہ یا پس منظری تمہیدی تبصرہ ہوتا ہے۔

                                     

ⓘ اداکاری فنون

  • حربی فنون یا رزمی فنون انگریزی: Martial Arts جسے مارشل آرٹ کے نام سے جانا جاتا ہے کسی بھی قسم کی لڑائی یا مقابلے کی ایک شکل ہے جس کا طریقہ کار وضع
  • ڈگری مکمل کرنا چاہتی تھی لیکن اداکاری اور فنون لطیفہ کی پیش کشیں اس کے راستے آتی رہیں اور آخر کار اس نے 1994 میں اداکاری کے پیشے کو اپنانے کا فیصلہ کیا
  • فیئر حاصل زیست اعزاز سے نوازا گیا تھا 1992ء میں حکومت ہند نے جیا بچن کو فنون میں پدم شری بھارت کا چوتھا سب سے امتیازی اعزاز سے نوازا جیا بچن کا تعلق
  • رہا ارجمند - پی ٹی وی 1970ء آنسو طارق بن زیاد بندش دیس پردیس عید کا جوڑا فنون لطیفہ ہوائیں اک نئے موڑ پہ پرچھائیاں دی کاسل - ایک امید ٹائپسٹ انسان اور
  • Performance حکومت پاکستان کی طرف سے ایک شہری اعزاز ہے جو پاکستان میں ادب فنون کھیل طب سائنس اور دیگر شعبوں میں اعلی کاردکرگی دکھانے والوں کو سال میں
  • Performance حکومت پاکستان کی طرف سے ایک شہری اعزاز ہے جو پاکستان میں ادب فنون کھیل طب سائنس اور دیگر شعبوں میں اعلی کاردکرگی دکھانے والوں کو سال میں
  • ادبیات میں داخلہ لیا اس تعلیم کے دوران میں انہوں نے جامعہ کے شعبہ فنون لطیفہ میں اداکاری کی تعلیم کے لیے داخلہ لے لیا جامعہ کی تعلیم فارغ التحصیل ہونے سے
  • 19 اکتوبر 1989ء پاکستان کے نامور ڈراما و فلمی اداکار تھے وہ مزاحیہ اداکاری کی وجہ سے شہرت رکھتے تھے سلیم ناصر 15 نومبر 1944ء کو ضلع مردان شمال
  • شمار بھارتی فلمی صنعت کی تاریخ کی معروف ترین ہستیوں میں ہوتا ہے اپنے اداکاری کے سفر کے دوران میں انہوں نے کئی بڑے ایوارڈ حاصل کیے جن میں تین نیشنل فلم
  • پینتیس میں ممبئی جو ان دنوں بمبئی تھا کاروبار کے سلسلے میں منتقل ہوئے اداکاری سے قبل یوسف خان پھلوں کے سوداگر تھے اور انہوں نے پونا کی فوجی کینٹین میں
  • کے دوستوں میں شامل تھے جن کے مشورے پر غلام حسین کتھک نے پہلے مصوری پھر اداکاری اور کلاسیکی رقص کی تربیت حاصل کی رقص میں ان کے استاد لکھنؤ کتھک اسکول
حربی فنون
                                               

حربی فنون

حربی فنون یا رزمی فنون جسے مارشل آرٹ کے نام سے جانا جاتا ہے، کسی بھی قسم کی لڑائی یا مقابلے کی ایک شکل ہے جس کا طریقہ کار وضع کیا گیا ہو۔ کئی قسم کے رزمی فنون مختلف ممالک کی طرف سے آ رہے ہیں۔ اس کی ممارست کئی وجوہات کی بنا پر کی جا سکتی ہے مثلاً مقابلہ، دفاع، کھیل، تندرستی، آرام اور استغراق وغیرہ۔ ایک رزمی فن مقابلہ کی ایک طرز ہے، لیکن زیادہ تر لوگ اسے اپنا دفاع کرنے کے لیے سیکھتے ہیں۔ عام استعمال یہ لفظ تمام دنیا میں لڑائی یا مقابلہ کے نظامات پر لاگو ہوتا ہے۔

سرکس
                                               

سرکس

سرکس ایک چلتی پھرتی فنکاروں کی کمپنی ہوتی ہے۔ جس میں شعبدہ باز، بذلہ گو، کسرتی جھولے، مختلف اقسام کے تربیت شدہ جانور اور دیگر متجسس کرتب دکھانے والے فنکار ہوتے ہیں۔ سرکس ایک دائرہ نما گھیرے میں دکھایا جاتا ہے جس کے چاروں طرف تماشائیاں بیٹھتے ہیں۔ زیادہ تر سرکس ایک وسیع خیمے کے نیچے دکھایا جاتا ہے۔