ⓘ Free online encyclopedia. Did you know? page 348




                                               

سردار فتح محمد بزدار

سردار فتح محمد بزدار نامزد وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے والد تھے۔ انہوں نے اپنی ابتدائی تعلیم بارتھی سے حاصل کی۔ فتح محمد نے کراچی یونیورسٹی سے ایم اے انگلش کیا۔ انہوں نے اپنی بلوچ ایجوکیشنل اسٹوڈنٹس سے کی جو بعد ازاں بی ایس او بن گئی، اس کے 1 ...

                                               

سریندر سائی

سریندر سائی بھارت کی ریاست اوڈیشا کے ایک مشہور مجاہد آزادی رہ چکے ہیں۔ ان کی اور ان کے معاون ساتھیوں کی کوششوں کی وجہ سے اور کئی دوسروں نے برطانیویوں کی مزاحمت کی اور کامیابی سے مغربی اوڈیشا کے علاقے کو ایک عرصے تک برطانوی حکمرانی سے بچائے رکھا ت ...

                                               

سشیل کمار رودر

سشیل کمار رودر ایک ہندوستانی ماہر تعلیم، مہاتما گاندھی اور سی ایف اینڈریوز کے رفیق اور سینٹ اسٹیفن کالج، دہلی کے پہلے ہندوستانی صدر مدرس تھے۔

                                               

سعادت یار خان رنگین

سعادت یار خان رنگین اردو زبان کے شاعر تھے۔ ریختی کے موجد سرہند میں پیدا ہوئے دہلی میں تعلیم پائی۔ زندگی کا زیادہ حصہ وہیں بسر ہوا۔ سپاہی پیشہ آدمی تھے۔ سیر و سیاحت کا شوق تھا۔ اکثر امرا کے پاس ملازم رہے۔ شہزادہ سلیمان شکوہ کے دربار سے بھی وابستہ ...

                                               

سعید بن زید

سعید نام،ابوالاعورکنیت ،والد کا نام زید اوروالدہ کا نام فاطمہ بنت بعجہ تھا،سلسلہ نسب یہ ہے،سعید بن زید بن عمروبن نفیل بن عبد العزی بن ریاح بن عبد اللہ بن قرظ بن زراح بن عدی بن کعب بن لوی القرشی العددی۔

                                               

سعید بن عامر

سعید بن عامر جمحی ایک صحابی رسول تھے۔ سعید بن عامر جمحی بھی سرداران قریش کی دعوت پر مکہ سے باہر مقام تنعیم پر صحابی رسول خبیب بن عدی کے قتل کا تماشا دیکھنے کے لیے اکٹھے ہوئے تھے۔ ابو سفیان بن حرب اور صفوان بن امیہ جیسے روساء قریش کے پہلو بہ پہلو ...

                                               

سفیان بن عبداللہ

سفیان بن عبد ﷲ ثقفی آپ کا نام سفیان ابن عبد اﷲ ابن ربیعہ ہے، کنیت ابو عمرو قبیلہ بنی ثقیف سے ہیں، اہل طائف میں سے ہیں، زمانۂ فاروقی میں طائف کے حاکم رہے، کل پانچ حدیثیں آپ سے مروی ہیں، بڑے متقی عابد تھے۔عمر فاروقِ اعظم نے عثمان بن ابو العاص کو طا ...

                                               

سلام مچھلی شہری

سلام مچھلی شہری کی ولادت 1 جولائی 1921ء کو صوبہ اترپردیش کے ضلع جونپور کے ایک شہر مچھلی شہر میں ہوئی۔ انہیں اردو، انگریزی اور فارسی زبانوں میں مہارت حاصل تھی۔ انہوں نے آل انڈیا ریڈیو کے شعبہ اردو میں گرانقدر خدمات انجام دیں۔ 19 نومبر 1972ء کو ان ...

                                               

سلطان غیاث الدین تغلق شاہ

غیاث الدین تغلق سلطنتی خانوادے کا بانی اور پہلا حکمران تھے۔ وہ غازی ملک کے نام سے مشہور تھے۔ وہ 8 ستمبر 1320ء میں تخت افروز ہوئے۔ ان کا دورِ حکومت 8 ستمبر 1320ء سے فروری 1325ء تک رہا۔ دہلی کا تغلق آباد اُنھوں نے تعمیر کی۔

                                               

سلیمان بن طرخان تیمی

سلیمان بن طرخان تیمی بصرہ کے بڑے عابد و زاہد تابعین میں سے تھے۔ ابن سعد کہتے ہیں عابد مجتہدین میں سے تھے۔ ان کی کنیت ابو المعتمر ہے، بنو تمیم سے نہیں تھے البتہ ان کے گھروں میں تربیت پائی تھی اس لیے اس کی طرف منسوب ہوئے۔ بصرہ میں رہتے تھے، نہایت ع ...

                                               

سلیمان بن عبد الوہاب

سلیمان بن عبد الوہاب حنبلی عالم دین تھے۔ آپ کا تعلق نجد کے علاقے سے تھا۔ آپ وہابی تحریک کے بانی، محمد ابن عبد الوہاب کے بھائی تھے۔ آپ اپنے بھائی اور وہابی تحریک کے پہلے نقادوں میں سے تھے۔

                                               

سمرہ بن جندب

سَمُرَہ نام ،ابو عبد الرحمان کنیت ،سلسلۂ نسب یہ ہے سمرہ بن جندب بن ہلال بن حریج بن مراہ بن حزن بن عمرو بن جابر بن ذوالریاستین خشین بن لای بن عاصم عصیم ابن شمخ بن فزارہ بن ذبیان بن بغیض بن ریث بن غطفان۔

                                               

سنان الدین فقیہ یوسف پاشا

سنان الدین فقیہ یوسف پاشا عثمانی ترک سیاست دان اور چوتھے وزیراعظم سلطنت عثمانیہ تھے۔ سنان الدین پاشا 1349ء سے ستمبر 1364ء تک وزیراعظم سلطنت عثمانیہ رہے۔

                                               

سکندر شاہین

سکندر شاہین ٹی وی کے مشہور اداکار گزرے ہیں۔ بے شمار ٹی وی ڈراموں اور فلموں اور اسٹیج ڈراموں میں کام کیا۔ ان کے یادگار ٹی وی ڈراموں میں زمین، وارث، سنہرے موسم اور پاگل، احمق اور بیوقوف شامل ہیں۔ سکندر شاہین گورنمنٹ کالج میں انگریزی کے لیکچرار بھی ...

                                               

سہل بن حنیف

ابن سعد کی روایت کے مطابق علی سے مواخاۃ ہوئی تمام غزوات میں شریک تھے،غزوۂ احد میں جب آنحضرتﷺ چند صحابہ کے ساتھ میدان میں رہ گئے تھے یہ بھی ثابت قدم رہے اسی دن موت پر بیعت بھی کی، رسول اللہ ﷺ کی طرف جو تیر آتے یہ ان کا جواب دیتے تھے،آنحضرتﷺ لوگوں ...

                                               

سیامک اطلسی

سیامک اطلسی ایرنی ٹی وی اور فلم کے نامور اداکار، صداکار، ہدائت کار اور مصنف ہیں۔ وہ ایران کے علاقے ارومیاہ میں 25 جون 1936 کو پیداہوئے۔ انہوں نے بہت سے ایرانی ٹی وی ڈراموں اور فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے ہیں۔ دادؤدمیر باقری صاحب کی ہدایتکاری ...

                                               

سید آل عمران

23 اکتوبر 1974 کو کوٹ سیداں گوجر خان میں پیدا ہوئے ، ان کے والد کا نام سید ظہور الحسن نقوی تھا۔پوٹھوہار کی تہذیب اور ثقافت میں جدید دورکے حوالے سے آپ کا نام انتہائی اہمیت کا حامل ہے تعلیم مکمل کرنے کے بعد ، وہ ایک طویل جدوجہد کے بعد میڈیا انڈسٹری ...

                                               

سید شاہ شریف

اُن کا نام سید شاہ شریف ہے، والد کا نام سید سیف الدین احمد، پانچویں پشت پر آپ کا نسب سید احمد جہاں شاہ سے ملتا ہے اور سید احمد جہاں شاہ کا نسب حسین بن علی کے واسطے سے علی بن ابی طالب سے ملتا ہے۔

                                               

سید شمس الحسن

سید شمس الحسن صوبہ یو پی کے ڈاکٹر امیر حسین کے بیٹے تھے۔ 1887ءمیں بریلی میں پیدا ہوئے۔ بریلی اور آگرہ میں تعلیم حاصل کی۔ میٹرک کرنے کے بعد عملی زندگی میں قدم رکھا۔ 1909 ءمیں جب مسلم لیگ نے ادارہ روزگار ایمپلائمنٹ قائم کیا تو وہ مسلم لیگ کے سیکرٹر ...

                                               

سید شہاب الدین مرعشی نجفی

سید شہاب الدین مرعشی نجفی آیت اللہ بروجردی کے بعد شیعہ مراجع تقلید میں سے ہیں۔ وہ 27 سال کی عمر میں درجۂ اجتہاد پر فائز ہوئے۔ مرعشی شیخ عبدالکریم حائری اور آقا ضیاء الدین عراقی کے شاگردوں میں سے تھے اور سیدعلی قاضی، سید احمد کربلائی اور میرزا جوا ...

                                               

سید ضرغام حیدر

سید ضرغام حیدر ، بھارت کے اترپردیش کی دوسری اسمبلی سبھا میں ممبر اسمبلی رہے۔ 1957 اترپردیش اسمبلی انتخابات میں انہوں نے اترپردیش کے بہرائچ ضلع کے 269 - بہرائچ اسمبلی حلقہ سے پرجا سوشلسٹ پارٹی کی جانب سے انتخابات میں حصہ لیا تھا۔

                                               

سید علی اوسط زیدی

سید علی اوسط زیدی اردو کے معروف سوز خوان تھے۔ وہ سنہ 1932ء میں موجودہ بھارتی ریاست اتر پردیش کے شہر میرٹھ میں پیدا ہوئے اور سنہ 2008ء میں کراچی میں وفات پائی۔

                                               

سید کفایت علی کافی

علماے بدایوں و بریلی سے حصولِ علم کیا۔ حدیث کا درس شاہ ابو سعید مجددی رام پوری تلمیذِ شاہ عبدالعزیز محدث دہلوی سے لیا۔ مولانا حکیم شیر علی قادری سے طب کی تعلیم حاصل کی۔ آپ مجاہدِآزادی مفتی عنایت احمدکاکوری تلمیذِ شاہ محمداسحاق دہلوی تلمیذ ونواسۂ ...

                                               

سید ہاشم رضا

معروف سماجی شخصیت۔ لکھنؤ میں پیدا ہوئے اور انیس سو چونتیس میں انہوں نے اِنڈین سِول سروس کا امتحان پاس کیا۔ پہلے انہیںاحمد نگر میں بحیثیت اسسٹنٹ کمشنر تعینات کیا گیا۔ وہ قیامپاکستان سے پہلے ہی تعینات ہو گئے تھے اور تقسیم ہند کے وقت وہ کراچی میں تھ ...

                                               

سیف ابن عمر

سیف ابن عمر السعیدی التیمی اسلامی عہد زریں میں مؤرخ اور اطلاعات کے مرتب تھے جو کوفہ میں رہتے تھے۔ سیف ابن عمر نے کتاب الفتاح الکبیر و الریدہ لکھا جو کتاب ابن جریر طبری کا اصل ذریعہ ہے فتنۂ ارتداد کی جنگیں اور ابتدائی اسلامی فتوحات کے لئے۔ اس کتاب ...

                                               

سیف اللہ خان بنگش

سیف اللہ بنگشن پاکستان پیپلز پارٹی کی طرف سے ایوان بالا پاکستان کے 2012ء میں رکن منتخب ہوئے۔ وہ اپنی وفات 1 فروری 2018ء تک سینٹ کے رکن تھے، ان کی وفات 70 سال کی عمر میں حرکت قلب بند ہونے سے ہوئی۔

                                               

سیماب اکبرآبادی

ان کا اصل نام عاشق حسین صدیقی تھا۔ سیماب آگرہ، اتر پردیش کے محلے نائی منڈی،کنکوگلی، املی والے گھر میں پیدا ہوئے۔ ان کے والد، محمّد حسین صدیقی بھی شاعر اور حکیم امیرالدین اتتار اکبرآبادی کے شاگرد تھے اور ٹائمز آف انڈیا پریس میں ملازم تھے۔

                                               

شاندارلی علی پاشا

شاندارلی علی پاشا چھٹے وزیراعظم سلطنت عثمانیہتھے۔ شاندارلی کا تعلق شاندارلی خاندان سے تھا جو سلطنت عثمانیہ کے ابتدائی زمانہ میں با اثر ترین خاندان تھا۔ شاندارلی علی پاشا 1387ء سے 1406ء تک طویل عرصہ یعنی 19 سال تک وزیر اعظم سلطنت عثمانیہ رہے۔ علی ...

                                               

شاکر علی (مصور)

پروفیسر شاکر علی پاکستان سے تعلق رکھنے والے نامور مصور، خطاط، پاکستان میں تجریدی مصوری اور تجریدی خطاطی کے بانی اور نیشنل کالج آف آرٹس لاہور کے سابق پرنسپل تھے۔

                                               

شاہ رخ تیموری

شاہ رخ مرزا یا شاہ رخ تیموری سلطنت کا حکمران تھا۔ وہ امیر تیمور کا چوتھا اور سب سے چھوٹا بیٹا تھا۔

                                               

شاہ عبد القادر بدایونی

آپ کی رسم تسمیہ خوانی آپ کے جد محترم نے فرمائی۔ بعد ازاں تعلیم کا سلسلہ شروع ہوا مولانا نور احمد صاحب نے کمالات علمیہ میں آپ کو معراج کمال تک پہنچایا۔ اس کے بعد آپ نے مولانا فضل حق خیر آبادی سے شرف تلمذ حاصل کیا۔ فضل حق کے شاگردوں میں چار شاگرد ع ...

                                               

شاہ علم اللہ

سید شاہ علم اللہ کی پیدائش 12 ربیع الاول 1033ھ میں ہوئی۔ بچپن میں ہی والدین کا سایہ سر سے اٹھ گیا تھا اس لیے ماموں سید ابو محمد نے پرورش کی۔ جوانی میں ماموں نے فوجی ملازمت کے لیے کوشش کی، لیکن شاہ صاحب دنیا سے دل برداشتہ ہو کر حضرت مجدد الف ثانی ...

                                               

شاہ نصیر

کام جاری شاہ نصیر دہلوی یا محمد نصیر الدین ناصر پیدائش: 1756ء - وفات: 23 نومبر 1838ء اٹھارہویں اور اُنیسویں صدی کے ابتدائی چار عشروں تک اردو زبان کے مشہور شاعر، میر تقی میر، مرزا غالب اور اُستاد ابراہیم ذوق کے ہم عصر تھے۔تخلص نصیر تھا۔

                                               

شاہزاد خلیل

شاہزاد خلیل پاکستان ٹیلی وژن کے ممتاز پروڈیوسر تھے جنہوں نے تنہائیاں ، راشد منہاس اور دھوپ کنارا جیسے مشہور و معروف ڈراموں کی پیشکش و ہدایات دیں۔

                                               

شاہنواز بھٹو

Fathers، Michal 17 October 1993. "The Bhutto inheritance". The Independent. UK. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 01 فروری 2018. Crossette، Barbara 25 September 1990. "Bhuttos Hunted Brother Is Hoping to Return". نیو یارک ٹائمز ...

                                               

شجاع اللہ

استاد شجاع اللہ پاکستان کے مشہور مصور اور جامعہ پنجاب کے فائن آرٹس ڈیپارٹمنٹ اور نیشنل کالج آف آرٹس میں استاد تھے۔ وہ منی ایچر پینٹنگز میں تخصیص رکھتے تھے۔

                                               

شداد بن اوس

شداد نام، ابو لیلیٰ و ابو عبد الرحمان کنیت قبیلہ خزرج کے خاندان نجار سے ہیں اور حضرت حسان بن ثابتؓ شاعر مشہور کے بھتیجے ہیں، سلسلۂ نسب یہ ہے، شداد بن اوس بن ثابت بن منذر بن حرام بن عمرو بن زید مناۃ بن عدی بن عمرو بن مالک بن نجار بن ثعلبہ بن عمرو ...

                                               

شفاء اللہ خان روکھڑی

شفاءاللہ خان روکھڑی ایک پاکستانی موسیقار تھے۔ جو روکھڑی ضلع میانوالی سے تعلق رکھتے تھے۔ شفاءاللہ خان روکھڑی نیازی کا تعلق نیازی قبیلہ سے تھا اور وہ متوسط گھرانے سے تعلق رکھتے تھے۔ 1966ء کو میانوالی سے 10 کلومیٹر دور بمقام روکھڑی میں پیدا ہوئے، گل ...

                                               

شقران صالح

صالح نام، شقران لقب اور والد کا نام بھی تھا، یہ عبدالرحمن بن عوف کے حبشی نژاد غلام تھے،لیکن اس غلامی میں بھی سیادت مقدر تھی ،رسول خدا ﷺ نے ان کو اپنی خدمت گزاری کے لیے پسند فرمایا اور عبد الرحمن کو قیمت دے کر خرید لیا، بعض روایتوں سے ظاہر ہوتا ہے ...

                                               

شمس تبریزی

شمس تبریزی یا شمس الدین محمد ایران کے مشہور صوفی اور مولانا روم کے روحانی استاد تھے۔ روایت ہے کہ شمس تبریزی نے مولانا روم کو قونیہ میں چالیس دن خلوت میں تعلیم دی اور دمشق روانہ ہو گئے۔ ابھی حال ہی میں ان کے مقبرے کو یونیسکو نے عالمی ثقافتی ورثہ ک ...

                                               

شہاب الدین خلجی

شہاب الدین عمر خان خلجی سلطنت دہلی کا تیسرا خلجی سلطان تھا۔ وہ اپنے والد علاء الدین خلجی کی وفات کے بعد کم عمری میں جنوری 1316ء کو سلطان بنا جس میں ملک کافور نے اس کی مدد کی۔ ملک کافور کے قتل کے بعد اس کا بھائی قطب الدین مبارک شاہ سلطان بن گیا۔

                                               

شہاب دہلوی

سید مسعود حسن المعروف شہاب دہلوی اردو زبان کے پاکستان سے تعلق رکھنے و الے نامور شاعر، مؤرخ اور اردو زبان کے مشہور جریدے الزبیر کے بانی مدیر تھے۔

                                               

شہزادہ جہانگیر

6 اکتوبر 1553ء کو شہزادہ مصطفیٰ کو پھانسی دی گئی تو یہ غم کی خبر جہانگیر تک پہنچی۔ جہانگیر شہزادہ مصطفیٰ کی موت کے باعث غم میں علیل ہوتا گیا اور محض 22 سال کی عمر میں 27 نومبر 1553ء کو انتقال کرگیا۔

                                               

شہزادہ محی الدین

شہزادہ محی الدین ، پاکستانی سیاست دان۔ سابق وزیر سیاحت۔ 1950ء میں چترال میں ایک شاہی گھرانے میں پیدا ہوئے۔ سیاست کے میدان میں طالب علمی کے زمانے ہی میں قدم رکھ دیا تھا۔

                                               

شیخ حمید الدین ناگوری

صوفی۔ بخارا میں پیدا ہوئے۔ خواجہ بختیار کاکی کے مرید اور خلیفہ تھے۔ اصل نام محمد تھا مگر حمید الدین کے نام سے مشہور ہوئے۔ والد کا نام عطار اللہ محمود تھا۔ جو شہاب الدین غوری کے زمانے میں بخارا سے ہندوستان آئے۔ اور دہلی میں مقیم ہوئے۔ شیخ حمید الد ...

                                               

شیخ خضر سیوستانی

شیخ خضر سیوستانی سندھ میں سلسلہ قادریہ کے عظیم المرتبت صوفی اور بزرگ تھے۔آپ کو ہندوستان میں سلسلہ قادریہ کی ترویج و اِشاعت میں اہم ترین صوفیا میں شمار کیا جاتا ہے۔ سندھ میں سلسلہ قادریہ کے فیوض و برکات کو عام کرنے میں شیخ خضر کا بڑا حصہ ہے۔ حضرت ...

                                               

شیخ دین محمد (گورنر)

شیخ دین محمد سندھ کے دوسرے گورنر جو 7 اکتوبر 1948ء تا 19نومبر 1949ء تک سندھ کے گورنر رہے۔یہ گورنر غلام حسین ہدایت اللہ کے بعد گورنر بنے ان کے والد کا نام محمد حسین تھا شیخ دین محمد کشمیر میں پیدا ہوئے

                                               

شیخ شرف الدین یحییٰ منیری

آپ کا نسب زیبربن عبدالمطلب سے جاکر ملتاہے اس طرح آپ کا خاندان قریشی ہاشمی ہے۔ آپ کے پردادا اپنے زمانہ کے بڑے عالم اورفقیہ تھے۔ اور شام سے نقل مکانی کرکے بہار کے قصبہ منیر میں قیام پزیر ہوئے۔

                                               

شیخ عنایت اللہ کمبوہ

شیخ عنایت اللہ کمبوہ ایک عالم، مصنف اور مؤرخ تھے۔ وہ میر عبدا للہ ، مشکین کلام کا بیٹا تھا ، جس کے لقب سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ وہ ایک عمدہ مصنف بھی رہے ہیں۔ شیخ عنایت اللہ کمبوہ شاہ جہاں کے دربار کے مشہور مورخ اور مغل بادشاہ اورنگ زیب کے استاد محم ...

                                               

شیخ قلندر بخش جرات

جرات اردو شاعر تھے جن کا اصلی نام یحٰیی امان تھا۔ والد حافظ امان دہلی کے باشندے تھے۔ سلسلہ خاندان رائے امان سے ملتا ہے۔ جو محمد شاہ کے زمانے میں شاہی دربان تھے۔ ولادتدہلی میں ہوئی۔ صغرسنی ہی میں فیض آباد چلے گئے۔ جعفر علی حیرت سے کلام پر اصلاح لی ...