ⓘ Free online encyclopedia. Did you know? page 346




                                               

الراشد باللہ

راشد باللہ ، ایک عباسی خلیفہ تھا۔ اس نے 1135ء/529ھ سے لے کر 1136ء/530ھ تک خلافت کا عہدہ سنبھالا۔ مسترشد باللہ نے اپنی زندگی میں ہی اپنے بیٹے کو ولی عہد نامزد کرکے اس کی بیعت لے لی تھی۔ 1135ء/529ھ میں باپ کے قتل کے بعد راشد باللہ تخت نشین ہوا۔

                                               

العزیز محمد بن غازی

العزیز محمد بن غازی ایوبی سلطنت میں حلب کے امیر تھے۔ وہ الظاہر غازی کے بیٹے اور صلاح الدین ایوبی کے پوتے تھے۔ ان کی والدہ ضیفہ خاتون صلاح الدین ایوبی کے بھائی ملک عادل کی بیٹی تھیں۔ الظاہر غازی کی 1216ء میں وفات کے وقت ان کی عمر صرف تین سال تھی۔ ...

                                               

القائم بامر اللہ

القائم بامر اللہ خلافت عباسیہ کا چھبیسواں حکمران خلیفہ تھا جس نے 1031ء سے 1075ء تک حکومت کی۔ القائم کے بعد طویل ترین حکمرانی الناصر لدین اللہ نے کی۔

                                               

اللہ رکھا خان

اللہ رکھا خان 1932ء کو گاؤں مظفر، سیالکوٹ، برطانوی ہندوستان موجودہ پاکستان میں پیدا ہوئے۔ بچپن ہی میں وہ امرتسر چلے گئے جہاں انہوں نے اپنے والد استاد لال دین سے سارنگی بجانی سیکھی بعد ازاں انہوں نے استاد احمدی خان، استاد اللہ دیا خان اور استاد نت ...

                                               

المستظہر باللہ

مستظہر کا نام احمد بن عبد اللہ المقتدی بامر اللہ ہے۔ کنیت ابوالعباس تھی۔ پیدائش ماہِ شوال 470ھ مطابق اپریل/ مئی 1078ء میں بغداد میں ہوئی۔ مشتظہر کے والد المقتدی بامر اللہ اور والدہ التون خاتون تھیں۔

                                               

المعتضد باللہ

آپ کا نام احمد کنیت ابو العباس اور لقب المعتضد باللہ ہے آپ کی پیدائش 242ھ یا 247ھ میں ہوئی آپ کی والد کا نام ابو احمد طلحہ الموفق باللہ یے۔ آپ کا سلسلہ نسب یہ ہے ابوالعباس احمد المعتضد باللہ ابن ابو احمد طلحہ الموفق باللہ ابن جعفر المتوکل علی الل ...

                                               

المقتدی بامر اللہ

المقتدی بامر اللہ خلافت عباسیہ کا ستائیسواں خلیفہ تھا جس نے 1075ء سے 1094ء تک حکومت کی۔مقتدی نے خلافت عباسیہ کے وقار کو قائم رکھا۔ اُس میں دِین و سیاست دونوں جمع تھے۔

                                               

المقتنیٰ بہاء الدین

بہاء الدین ایک سریانی مسیحی تھا اور اس کا نام المقنیٰ بہا الدین تھا۔ دروز مذہب کی اشاعت کے لیے حمزہ بن علی بن احمد کے اس شاگرد نے اس کی مسند سنبھال لی جسے کے بعد کچھ مدت تک رپوش رہا۔ لیکن یہ معلوم نہ ہو سکا کہ اس نے یہ وقت مصر میں گزارا یا شام تک ...

                                               

الموفق باللہ

آپ کا نام طلحہ کنیت ابو احمد اور لقب الموفق باللہ اور الناصر الدین اللہ ہے۔ آپ کے والد کا نام المتوکل علی اللہ ہے۔ آپ کی پیدائش چار شنبہ 2 ربیع الاول 229ھ کو ہوئی۔ آپ کا نسب نامہ یہ ہے ابو احمد طلحہ الموفق باللہ ابن المتوکل علی اللہ ابن المعتصم ب ...

                                               

المہتدی باللہ

المہتدی باللہ خلافت عباسیہ کا چودہواں خلیفہ تھا جس نے 869ء سے 870ء تک حکومت کی۔ اُس کا عہدِ حکومت گیارہ مہینے رہا۔ مہتدی باللہ کے عہد خلافت میں خلافت عباسیہ کا ایک حصہ جو مصر اور بلاد الشام پر واقع تھا، دولت طولونیہ کی شکل میں ایک نئی باقاعدہ سلط ...

                                               

امام زادے خلیل پاشا

امام زادے خلیل پاشا سلطنت عثمانیہ کے ایک ریاست کار تھے۔ وہ وزیر اعظم سلطنت عثمانیہ کے 1406 تا 1413ء تک وزیر اعظم رہے۔ ان کا بیٹے محمد نظام الدین پاشا، نے بھی وزیر اعظم بنے تھے۔

                                               

امانت لکھنوی

امانت لکھنوی شاعر، ڈراما نگار، سید آغا حسن نام، سید آغا رضوی کے بیٹے ۔لکھنؤ میں پیداہوئے وہیں علوم مروجہ کی تحصیل کی۔ شروع میں مرثیے کہتے اور میاں دلگیر سے اصلاح لیتے تھے۔ پھر غزل پر طبع آزمائی کرنے لگے۔ 1835ء میں بعمر بیس سال کسی بیماری سے زبان ...

                                               

امبروز فلکس ڈنڈس

سر امبروز ڈنڈس فلکس ڈنڈس برطانوی ہندوستان میں ایک سرکاری ملازم تھے، اس کے علاوہ 1952 سے 1959 تک وہ آئل آف مین کے لیفٹینٹ گورنر بھی تھے۔ وہ 1948 سے 1949 تک پاکستان کے صوبے خیبر پختونخوا کے آخری برطانوی گورنر رہے۔

                                               

امریش باگچی

ٰ امریش باگچی اپنی زندگی کے آخری دور میں کمیشن برائے مرکز ریاست تعلقات کے ایک رکن تھے۔ وہ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف پبلک فائنانس اینڈ پالیسی، نئی دہلی میں پروفیسر ایمیریٹس رہے تھے۔ ان کا سب اہم کارنامہ جس کے لیے انہیں یاد کیا جاتا ہے وہ یہ ہے کہ وہ بھا ...

                                               

امید علی خان

استاد امید علی خان 1914ء کو گاؤں جنڈیالہ گرو، امرتسر، برطانوی ہندوستان میں پیدا ہوئے۔ ان کا تعلق موسیقی کے مشہور گوالیار گھرانے سے تھا۔ اس گھرانے کا میاں تان سین سے براہ راست نسبی تعلق ہے۔ امید علی خان کے والد استاد پیارے خان اور دادا استاد میران ...

                                               

امیر جلال الدین میران شاہ

امیر جلال الدین میران شاہ امیر تیمور کی زندگی میں آذربائیجان کا حاکم تھا۔ مگر یہ علاقہ اپنے بیٹے ابوبکر کے حوالے کر کے خود تبریز میں مقیم رہا۔ کیانکہ اس کی آب و ہوا اسے بہت موافق تھی۔

                                               

امیر گلستان جنجوعہ

امیر گلستان جنجوعہ خیبر پختونخوا کے سابق گورنر تھے۔ 19 فروری 2019ء کو راولپنڈی میں انتقال کرگئے۔ اُن کی عمر پچانوے برس تھی۔ ان کی نماز جنازہ منگل شام چار بجے ریس کورس قبرستان راولپنڈی میں ادا کی گئی۔ گلستان جنجوعہ نے سعودی عرب، متحدہ عرب امارات ا ...

                                               

امین الرشید

امین الرشید عباسی خلیفہ اور ہارون الرشید کا بیٹا تھا۔ زبیدہ کے بطن سے تھا۔ ہارون الرشید کی وفات 193ھ کے بعد خلافت سنبھالی۔ باپ نے سلطنت کو دو حصوں میں تقسیم کرکے اپنے دونوں بیٹوں امین اور مامون کے حوالے کرنے کی وصیت کی۔ اور یکے بعد دیگرے دونوں کو ...

                                               

انس بن سیرین

اَنَس بن سيرين انصاری، اَبُو موسی، یا ابو عبد اللہ، یا ابو حمزہ بصری، مولیٰ انس بن مالک اور محمد بن سیرین و حفصہ بنت سیرین کے بھائی تھے۔ عثمان بن عفان کی خلافت سے دو یا ایک سال پہلے پیدا ہوئے، اور زید بن ثابت کی خدمت میں حاضر ہوئے۔ کہا جاتا ہے کہ ...

                                               

اوس بن حجر

اوس بن حجر – ابو شُرَیح اَوس بن حَجَر پیدائش: 530ء – وفات: 625ء عرب کے عہدِ جاہلیت کا مشہور شاعر تھا۔ قبل از اسلام یہ عربی زبان کا سب سے بڑا شاعر تسلیم کیا جاتا تھا۔فرزدق اور بعد کے متاخر عرب شعراء اِس کی شاعری کے قائل تھے۔الاصمعی نے اوس بن حجر ک ...

                                               

اکبر الہ آبادی

الہٰ آباد کے قریب ایک گاؤں میں پیدا ہوئے۔ آپ کا اصل نام سید اکبر حسین رضوی تھا اور تخلص اکبر۔ آپ 16 نومبر1846ء میں پیدا ہوئے۔ ابتدائی تعلیم سرکاری مدارس میں پائی اور محکمہ تعمیرات میں ملازم ہو گئے۔ 1869ء میں مختاری کا امتحان پاس کرکے نائب تحصیلدا ...

                                               

اکبر شاہ خان نجیب آبادی

اکبر شاہ نجیب آبادی کی پیدائش 1875ء کو بجنور کے علاقہ نجیب آباد میں ہوئی۔ تعلیم سے فراغت کے بعد نجیب آباد مڈل اسکول میں 1897ء میں پڑھانا شروع کیا اور پھر ہائی اسکول میں فارسی کے مدرس ہوئےـ۔ 1906ء اور 1914ء کے درمیاں قادیان میں رہے اور قادیانیت اخ ...

                                               

اکبر وارثی

ملک الشعرا خواجہ اکبر وارثی میرٹھی اردو وبان کے ممتاز نعت گو شاعر تھے۔ اکبر وارثی بجولی تھانہ کھر کھودا تحصیل ہاپڑ ضلع میرٹھ میں پیدا ہوئے۔ آپ اردو کے علاوہ عربی و فارسی کے بھی عالم تھے۔ ان کی نعتیں سلاست، روانی، بندش کی چسپی، صفائی، سادگی اور شی ...

                                               

اکرام اللہ گنڈاپور

سردار اکرام اللہ خان گنڈاپور ایک پاکستانی سیاست دان اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنما تھے۔ وہ صوبائی وزیر زراعت رہے۔ وہ اپنے بھائی کی نشست پر ضمنی انتخابات کے ذریعے منتخب ہوئے تھے۔ اکرام اللہ ڈیرہ اسماعیل خان میں کولاچی خودکش دھماکے میں شدید زخمی ...

                                               

ایس ایم معین قریشی

پہاڑ تلے West is West ہیڈلائٹ خود خوش حملہ اُردو زبان و ادب اشتہاریات سماجی تحفظ ہر شاخ پہ Crocodile Tears بہ نظر ِ غائر East is East بالقرض محال بقلم بخود حواس خستہ اب میں لکھوں کہ نہ لکھوں

                                               

ایلون

بائبل میں ایلون یا آہیلون کا دوآئے–ریھمس میں ذکر ہے۔ اور ان آیات کے مطابق یہ اسرائیل کا قاضی تھا۔ اس نے ابصان کی پیروی کی اور عبدون اس کا جانشین بنا،اور کتاب قضاۃ میں لکھا ہے ایلون کا تعلق قبیلہ ظیبلون سے تھا،وہ اسرائیل کا دس سالوں تک قاضی رہا او ...

                                               

ایم شریف (خطاط)

ایم شریف 1901ء کوراولپنڈی، برطانوی ہندوستان میں پیدا ہوئے تاہم انہوں نے عمر کا بیشتر حصہ پشاور میں بسر کیا۔ ان تعلق گوجرانوالہ کے ایک خطاط گھرانے سے تھا۔ وہ نامور خطاط احمد علی منہاس کے بھتیجے تھے۔ انہوں نے خطاطی میں نئی جدتیں اور طرز پیدا کیں او ...

                                               

ایوب سختیانی

ایوب اگرچہ غلام تھے لیکن اقلیم علم و عمل کے تاجدار تھے۔ ابن سعد لکھتے ہیں: كان أيوب ثقة ثبتاً في الحديث، جامعاً عدلاً، ورعاً، كثير العلم، حجة۔ نووی لکھتے ہیں کہ ان کی جلالت، ان کی امامت ان کے حفظ، ان کی توثیق، ان کے وفور علم ان کی فہم اور سربلندی ...

                                               

ایڈورڈ ایلڈر

ایڈورڈ ایلڈر ایک انگریز بادشاہ تھا۔ وہ 899ء میں اپنے والد الفریڈاعظم کی وفات کے بعد بادشاہ بنا۔ اس کا دربار ونچیسٹر میں تھا جو ویسکس کا سابقہ دار الحکومت تھا۔

                                               

بابا شرف الدین

بابا سید شرف الدین سہروردی ایک عراقی صوفی بزرگ تھے جو عراق عرب سے ہندوستان دکن تشریف لائے۔ وہ علی بن ابی طالب کی تیرہویں نسل اور سید محمود بن سید احمد کے فرزند تھے۔

                                               

بابا پدمن جی

بابا پدمن جی مُلے مراٹھی کے اولین ناول نگار، لغت نگار اور مقالہ نگار ہونے کے علاوہ مراٹھی میں مسیحی ادب کے بانی ہونے کی حیثیت سے بھی بابا پدمن جی ممتاز مقام کے مالک ہیں۔ وہ برہمن تھے اور ان کا خاندانی لقب ”ملے" تھا۔ ان کا جنم اور ابتدائی تعلیم بی ...

                                               

بارہواں دلائی لاما

بارہویں دلائی لاما ترنلی گستاؤ 1856ء میں لہوکا میں پیدا ہوئے اورانہیں 1858ء میں صرف 2سال کی عمرمیں دلائی لامہ کے طور پر نامزد کر دیا 1860ء میں 5سال کی عمرمیں کہ دوران ان کی تاج پوشی ہوئی اور انہیں بدھ ازم کی تعلیم اور روحانیت کے اسراراموز سیکھانا ...

                                               

بایان قلی

بایان قلی خان چغتائی خانان 1358 سے 1348 تک اور دووا کا پوتا تھا. 1348 میں بایان قلی کو قاراؤنکے حکمران ، امیر قزاغن نے خان کی حیثیت سے بڑھایا ، جس نے 1346 میں چغتائی اولس کا مؤثر طریقے سے کنٹرول سنبھال لیا تھا۔ اگلی دہائی تک وہ قزاغن کا کٹھ پتلی ...

                                               

برق دہلوی

برق دہلوی کا اصل نام منشی مہاراج بہادر تھا اور تخلص برق دہلوی تھا۔ آپ کی پیدائش جولائی 1884ء میں دہلی میں ہوئی تھی۔ ان کے والد منشی ہر نرائن داس حسرت بھی ایک شاعر تھے اور ان کے نانا رائے دولت رام عبرتؔ،ذوق دہلوی کے تلامذہ تھے۔ بچپن سے ہی برق صاحب ...

                                               

برکت احمد

برکت احمد ایک سپاہی اور جنگ آزادی ہند 1857ء میں ایک سرکردہ باغی شخصیت تھی۔ برکت احمد اودھ کے علاقے میں معرکہ چنہٹ میں ہندوستانی باغیوں کی فوج کی قیادت کر رہے تھے۔ برکت احمد ایک اعلیٰ تربیت یافتہ برطانوی سپاہی تھے۔ انہوں نے برطانوی افسر ہنری منٹگم ...

                                               

برکت اللہ (آرچ ڈیکن)

علامہ برکت اللہ ایک اعتذار پسند مسیحی تھے اور انہوں نے شیعہ اسلام ترک کر کے انگلیکان مسیحیت اختیار کی تھی۔۔ ابتدائی تعلیم مشن اسکول سے حاصل کی اس کے بعد ایک مدرسے میں داخل کروادیاگیا۔جب پانچویں کلاس میں پہنچے تو تومسیحی تعلیم کی لیاقت اور معلومات ...

                                               

برکت علی خان

استاد برکت علی خان پاکستان سے تعلق رکھنے والے موسیقی کے مشہور پٹیالہ گھرانے کے نامور کلاسیکی گائیک تھے۔ وہ استاد علی بخش خان قصوری کے فرزند اور استاد بڑے غلام علی خان کے چھوٹے بھائی تھے۔

                                               

برہان الحق جبل پوری

عید السلام، مفتی برہان الحق جبل پوری ہندوستان کے نامور مسلمان سنی عالم دین اور سیاست دان تھے۔ ندوۃ العلما کے ابتدائی دور کے رکن تھے، 1312ھ میں ندوہ کی خصوصی مجلس کے رکن بنے۔ بعد میں اختلافات کی وجہ سے الگ ہو گئے۔ احمد رضا خان نے آپ کو خلافت دی او ...

                                               

بسین مورمو

بسین مورمو سنتالی فلم اور البم دنیا میں ابھرتے ہوئے مقبول گلوکار تھے۔ ان کی پیدائش 09/04/2019 کو اوڈیشا کے میوربھنج ضلع کے بیجتلا بلاک کے گاؤں برھاجیان میں ہوئی تھی۔ ان کے والد کا نام ناران مورمو اور والدہ کا نام مینا مورمو ہے۔ ان کی اہلیہ کا نام ...

                                               

بشر بن مروان

ابو مروان بشر بن مروان بن الحكم ایک اموی شہزادہ اور اپنے بھائی خلیفہ عبد الملک کے دور میں عراق کا گورنر تھا۔ بشر بن مروان نے اپنے والد خلیفہ مروان بن الحكم کے ساتھ جنگ مرج راهط‎ کی لڑائی میں شرکت کی۔ مروان نے بشر کو اپنے بھائی عبد العزیز کے ساتھ ...

                                               

بشیر النساء بیگم

بشیر کا مجموعہ کلام ’’آبگینہ‘‘ کے نام سے ادارۂ اَدبیات اُردو، حیدرآباد دکن سے 1948ء میں شائع ہوا تھا۔ مجموعہ کلام میں حمد و نعت پر متعدد نظمیں موجود ہیں۔ یوں بھی بشیر کو غزل کی بجائے نظم سے زیادہ رغبت تھی۔ اُس دور میں وہ شعرا میں ڈاکٹر محمد اقبال ...

                                               

بطلیموس چہاردہم

بطلیموس چہاردہم مصر کے بطلیموسی خاندان کا فرعون مصر تھا۔ بطلیموس چہاردہم نے 47 ق م سے 44 ق م تک مصر پر ملکہ قلوپطرہ کے ساتھ بحیثیت مشترکہ حکمران حکومت کی۔

                                               

بلاپپا حککری

بلاپپا حککری اپنے ابتدائی سالوں میں کنڑ زبان میں لوک گیت اور بھاواگیت کے گلوکار اور ایک تحریک آزادی کے کارکن تھے۔ انھیں بنیادی طور پر شمالی کرناٹک میں سوگما سنگیتھا کو مقبول بنانے کا سہرا ہے، بالکل اسی طرح پی. کلنگا راؤ کی طرح جس نے جنوبی کرناٹک ...

                                               

بلونت سنگھ

بلونت سنگھ ہندی: बलवंत सिंह بیسویں صدی کے اردو اور ہندی کے مشہور و معروف ڈراما نویس، ناول و افسانہ نگار اور صحافی ہیں جنہوں نے جگا، پہلا پتھر، تاروپود، ہندوستان ہمارا جیسے افسانوی مجموعے اور کالے کوس، رات، چور اور چاند، چک پیراں کا جسا جیسے لازوا ...

                                               

بندر عبد العزیز بلیلہ

بندر بن عبد العزیز بن سراج بن عبد الملک بلیلہ قرآن مجید کے قاری اور سعودی عرب کے امام حرم ہیں، مکہ میں سنہ 1395ھ میں پیدا ہوئے اور وہیں اپنی مکمل تعلیم حاصل کی، جامعہ ام القری سے فراغت تحصیل کی، جامعہ ام القری ہی سے سنہ 1422ھ میں کلیہ الشریعہ اور ...

                                               

بھائی منی سنگھ

بھائی منی سنگھ پرمار سکھ راجپوت کا جنم 10 مارچ، سنّ 1644 کو موضع علی پور ، شمالی ضلع مظفرگڑھ میں ہوا تھا۔ اس کے باپ کا نام مائی داس اور ماں کا نام مدھری بائی تھا۔

                                               

بہادر شاہ اول

بہادر شاہ اول مغلیہ سلطنت کا ساتواں شہنشاہ تھا جس نے ہندوستان پر 1707ء سے 1712ء تک حکومت کی۔ اس کا اصل نام قطب الدین محمد معظم تھا، جبکہ اس کے والد اورنگزیب عالمگیر نے اسے شاہ عالم کا خطاب دیا تھا۔ ملا ابو سعید آپ کے استاذ تھے.

                                               

بی ایم غفور

بی ایم غفور ایک بھارتی کارٹونسٹ اور مزاحیہ فنکار تھا۔ وہ کیرالہ کا ایک بہت نامور کارٹونسٹ تھا اور کیرالہ کارٹون اکیڈیمی کا بانی تھا۔ تین دہائی سے زائد کے کیرئیر میں کچھ بہت مشہور کامکس تخلیق کیے جن میں کنجمان شامل ہے ایک کنچیری آبادی میں غفور سین ...

                                               

بیخود بدایونی

بیخود بدایونی انیسویں صدی کے اختتام اور بیسویں صدی کے ابتدائی عشروں کے نمایاں شاعر تھے۔ان کا حقیقی نام مولوی عبد الحئی تھا۔ ان کے والد کا نام مولوی غلام رسول تھا۔ ان کا تعلق بدایوں, بھارت سے تھا۔ ان کی پیدائش 17ستمبر 1857ء کو بدایوں میں ہوئی تھی ...

                                               

بیخود دہلوی

بیخود دہلوی کا حقیقی نام سید وحید الدین تھا۔ بیخودؔ تخلص اختیار کرنے سے پہلے ان کا تخلص نادرؔ تھا۔ وہ 21 مارچ 1863ء کو بھرت پور میں پید اہوئے۔ دہلی میں انہوں نے سکونت اختیار کی تھی۔ یہاں پر میں اردو اور فارسی کی تعلیم حاصل کی۔ مولانا حالیؔ سے ’’م ...